آقای مرحوم آغا سید مصطفیٰ الموسوی الصفوی ؒکو ان کی 20ویں برسی پر انجمن شرعی کی جانب سے زبردست خراج تحسین

(بڈگام) آقای مرحوم آغا سید مصطفیٰ الموسوی الصفوی ؒکی 20ویں برسی پر انجمن شرعی شیعیان کشمیر کی جانب سے مرکزی امام باڑہ بڈگام میں پر وقار مجلس عزا کا انعقاد کیا گیا جس میں مقررین نے آقای مرحوم کو زبردست خراج تحسین پیش کیا۔

علمدار کربلاحضرت ابوالفضل العباس ؑ کی مادر گرامی جناب ام البنین ؑ کے یوم وفات اور آقای مرحوم حجت الاسلام والمسلمین آغا سید مصطفیٰ الموسوی الصفویؒ کی 20ویں برسی کی مناسبت سے مرکزی امام باڑہ بڈگام میں پروقار مجلس عزا کا انعقاد کیا گیا جس میں ہزاروں عقیدت مندوں نے شرکت کی۔

مجلس کے آغاز میں آقای مرحوم کے ایصال ثواب کے لئے قرآن خوانی اور فاتحہ خوانی کی گئی۔ تنظیم کے مرکزی ذاکرین، ذاکر سید محمد انیس الموسوی اور ذاکر تصدق حسین نے مرثیہ خوانی کی اور کئی علماء دین نے صدر مرحوم کے خدمات اور کارناموں کو یاد کیا۔

مجلس میں انجمن شرعی شیعیان کشمیر کے صدر، حجت الاسلام والمسلمین آغا سید حسن الموسوی الصفوی بھی موجود تھے۔

مقررین نے آقای مرحوم کو شاندار خراج عقدیت پیش کرتے ہوئے مرحوم کے دینی علمی اور تنظیمی خدمات پر روشنی ڈالی، مقررین نے کہا کہ آقای مرحوم ایک مرد درویش، متقی اور مدبر دینی رہنما ہونے کے ساتھ ساتھ سیاسی فہم اور ادراک بھی رکھتے تھے۔

آقای مرحوم نے اہلبیت نبویؑ کی سیرت و کردار کو مشعل راہ بنا کر اپنے پیشرو اور زعیم خانوادہ، بانی انجمن شرعی شیعیان کشمیر، حجت الاسلام والمسلمین آغا سید یوسف الموسوی الصفوی ؒ کی اطاعت اور فرمان برداری کا شاندار مظاہرہ کیا اور اس سلسلے میں بانی انجمن شرعی کو کبھی بھی شکایت کا موقعہ نہیں دیا، آپ ایک جان نثار سپاہی کی طرح بانی انجمن شرعی کے ہر حکم کو زمینی سطح پر عملانے کے لئے ہر وقت کمر بستہ رہے، آقای مرحوم نے تنظیم کی تشکیل میں کلیدی رول ادا کیا اور تنظیم کو فعال بنانے کے لئے ہمیشہ مصروف عمل رہے۔

مقررین نے کہا کہ بانی انجمن شرعی کی وفات کے بعد آقای مرحوم خانوادہ کی سنت اور ایقاذالعباد کے مطابق زعیم خانوادہ ہوئے تو انہیں ہر طرف حوصلہ شکن حالات کا سامنا ہوا لیکن آقای مرحوم نے عزم و استقلال اور استقامت کا مظاہرہ کرکے اپنے اسلاف کے دینی مشن کو بام عروج تک پہنچایا۔

اس موقعہ پر مقررین نے شہید آیت اللہ باقر النمرؒ اور شہید حاج قاسم سلیمانیؒ کے کارناموں کو بھی یاد کیا اور ان کی عظیم شہادتوں کو عقیدت کا خراج نذر کیا۔

مجلس کے اختتام پر صدر انجمن شرعی شیعیان نے دعائیہ کلمات دہرائے اور شرکاء مجلس کا شکریہ ادا کیا۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔