پاکستان صوبہ سندھ مسجد شریف میں دہشت گردانہ حملے کی مذمتشہداء کے لواحقین اور شیعیانِ پاکستان سے آغاسید حسن الموسوی الصفوی کا اظہار تعزیت 

سرینگر/یکم فروری2015/جموں کشمیر انجمن شرعی شیعیان کے سربراہ حجۃ الاسلام والمسلمین جناب آغا سید حسن الموسوی الصفوی نے شکار پور سندھ پاکستان کی ایک مسجد شریف میں دلدوز دہشت گردانہ حملے کی پر زور الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے حملے میں شہید درجنوں افراد کے لواحقین اور شیعیان پاکستان سے تعزیت کی ہے۔
آغا صاحب نے پاکستان میں شیعہ مسلک کی مساجد اور امام بارگاہوں کو نشانہ بنانے اور مسلکی انتہاپسندی کے نتیجے میں آئے روز قیمتی جانوں کے زیاں پر گہرے رنج و غم کا اظہار کرتے ہوئے دہشت گرد تنظیموں کے خاتمے کیلئے پاکستانی حکومت کے عزم و حوصلے اور افواج پاکستان کے جاری آپریشن کو دین و انسانیت کے بقاء کیلئے ایک انتہائی ناگزیر حکومتی اقدام سے تعبیر کیا۔انہوں نے کہا کہ مسلکی بنیاد پر بے دردی کے ساتھ پاکستان کی شیعہ برادری کو نشانہ بنایا جارہا ہے۔ اس قیامت خیزی پر شیعیان پاکستان جس صبر اور تدبر کا مظاہرہ کررہے ہیں وہ ہر لحاظ سے قابل تحسین ہے۔
آغا صاحب نے واضح کیا کہ پاکستان میں شیعہ سنی کے درمیان اگر چہ اتحاد و اخوت کا کوئی فقداں نہیں تاہم ایک مخصوص طبقہ فکر کا انتہا پسندانہ نیٹ ورک شیعیوں کو نشانہ بنارہا ہے جو بنیادی طور پر کسی بھی مسلمان مسلک کا خیر خواہ نہیں جس کے تانے بانے تکفیری فکر و سوچ سے ملتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان میں مسلکی انتہا پسندی کو فروغ دینے میں صہیونی اور صلیبی قوتیں بنیادی کردار ادا کررہی ہیں۔حال ہی میں پاکستان میں دائش کیلئے نوجوانوں کو بھرتی کرنے والے شخص نے جو انکشافات کئے ہیں وہ پوری ملت اسلامیہ کیلئے ایک لمحہ فکریہ ہے

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔