عید پیغام

عید الفطر کے متبرک موقعہ پر فرزندان توحید کو پُر خلوص ہدیہ تہنیت پیش کرتے ہوئے اسلام کی سربلندی اور عالم اسلام کی امن و سلامتی کیلئے رب العزت کی بارگاہ میں دست بدعا ہوں ۔ خداکرے یہ عید امت مسلمہ کے باہمی اتحاد و اخوت کے استحکام اور امت مسلمہ میں انتشار پیدا کرکے اپنے مکروہ مقاصد کی تکمیل کے درپے استکباری قوتوں کی ابدی مایوسی اور رسوائی کی نوید لیکر آئے۔ اسلام نے ماہ مبارک کے روزوں کی استجابت کو عید سے پہلے زکوٰ ۃ فطرہ کی ادائیگی سے مشروط بنایا ہے جس میں یہی فلسفہ پوشیدہ ہے کہ مسلمان کی کوئی بھی عبادت تب تک اللہ تعالیٰ کے یہاں قابل قبول نہیں جب تک وہ اپنے محروم و مظلوم اور پریشان حال بھائیوں کی خبر گیری اور حمایت و نصرت کیلئے اپنی ذمہ داریوں کی ادئیگی کا احساس نہ کرے۔ آج ہم ایک ایسے ماحول میں عید منانے جارہے ہیں جب کئی اسلامی ممالک میں نہتے شہریوں ، بچوں ، بزرگوں اور خواتین کا بے دریغ قتل عام جاری ہے۔ ماہ مبارک کے دوران کئی اسلامی ممالک میں تکفیری عناصر کے ہاتھوں سینکڑوں روزہ دار نمازیوں کی شہادتوں کا غم ابھی تازہ ہے۔ یمن پر تین ماہ سے سعودی عربیہ کی فضائی جارحیت میں ہزاروں کی تعداد میں نہتے عوام پیوند خاک کئے جاچکے ہیں اور دنیا میں ان مظلوموں کے حق میں کہیں سے کوئی انصاف خواہ آواز بلند نہیں ہورہی ہے۔ برما میں مسلمانوں کو اپنے وطن سے بے دخل کرنے کیلئے ان کا سفاکانہ قتل عام جاری ہے ۔مسلم امہ کے اتحاد و اخوت کو پارہ پارہ کرنے کیلئے امریکہ اور اسرائیل کی سرپرستی والی تکفیری دہشت گردی اسلام کے لبادہ میں دین و ملت کو ناقابل تلافی نقصانات سے دوچار کررہی ہے ۔ کشمیریوں کی تحریک آزادی کے خاتمے کیلئے بھارت کا جبر قہر جاری ہے۔دنیائے اسلام کی اس پریشان کن صورتحال اور کشمیر میں سال گزشتہ کے تباہ کن سیلاب کی تباہ کاریوں اور موسم کی مسلسل ناسازگاری کی وجہ سے جس صورتحال کا اہل کشمیر کو سامنا ہے اس صورتحال میں ہمارے لئے اس سال کی عید میں جشن و انبساط کا کوئی پہلو نہیں ۔اس صورتحال میں ہمارے لئے عید کا یہی پیغام ہے کہ ہم عالم اسلام کے خلاف استکباری قوتوں کی منصوبہ بندیوں کا باریک بینی سے جائزہ لیکر اس حوالے سے اپنی ذمہ داریوں کا عزم کریں۔ اپنے نادار مساکین و محتاج لوگوں کی طرف عید کے موقعہ پر خصوصی توجہ دیکر ان کی خبر گیری کریں۔ عید نہایت سادگی سے مناکر دنیا بھر میں ظلم و جبر کے شکار مسلمان بھائیوں اور مصیبت زدہ گان سے یکجہتی کا مظاہر ہ کریں۔ اللہ تعالیٰ ہمیں فلسفہ ماہ رمضان کو سمجھنے اور اس کا عملی مظاہرہ کرنے کی توفیق عطا فرمائے۔ آمین
17جولائی2015

2 thoughts on “عید پیغام

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔