انجمن شرعی شیعیان جموں و کشمیر کی جانب سے متعدد مقامات پر دعاء عرفہ کے پروگرامات کا اہتمام

بڈگام/ ذی الحجہ کی نویں تاریخ روز عرفہ ہے جو پورے سال میں عبادت اور دعا کے لحاظ سے ممتاز ہے جیسا کہ کوئی بھی رات شب قدر کے برابر فضیلت نھیں رکھتی، روز عرفہ ،بعد از زوال سال کے دنوں میں مخصوص امتیاز رکھتا ہے، اگرچہ روز عرفہ حضرت سید الشہداء امام حسین (علیہ السلام) کی قبر مطہر کے پاس ہونا اور اسی طرح حج سے مشرف ہونا اور صحرائے عرفات میں وقوف کی ایک بہت بڑی فضیلت ہے کہ جس سے ہم بہت سے لوگ محروم رہتے ہیں، لیکن ہم میں سے ہر شخص چاہے کسی بھی جگہ ہو عصر روز عرفہ میں خداوند عالم کی بارگاہ میں دعا اور التجا کے موقع کو فرصت شمار کرے، جیسا کہ حضرت امام محمد باقر (علیہ السلام) سے منقول ہے کہ آپ نے فرمایا: ”یوم عرفہ یوم دعاءو مسالة“(روز عرفہ [خداوندعالم سے] سوال اور دعا کا دن ہے) روز عرفہ کی دعاﺅں میں سے دعائے عرفہ حضرت امام حسین (علیہ السلام) ہے کہ جو توحید کی نایاب تعلیمات ، معرفت الٰھی اور تزکیہ نفس کے اسباق کا گرانقدر مجموعہ ہے، اور اسی طرح صحیفہ سجادیہ (زبور آل محمد ”ع“)میں حضرت امام سجاد (علیہ السلام) کی دعائے عرفہ بھی ہے۔

عرفہ کی اسی فضیلت کو مدنظر رکھتے ہوئے انجمن شرعی شیعیان جموں و کشمیر نے وادی کے کچھ خاص علاقوں میں دعائے عرفہ پڑہنے کا اہتمام کیا ہے جس کی تفصیل مندرجہ ذیل پوسٹر میں موجود ہے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔